بالوں کی بیماریوں کے اصل وجوہات کون سے ہے۔ مختلف ملکوں کے ڈاکٹر کی تحقیق سامنے آگئے۔

اسلام آباد (نائن نیوز) آج کل بالوں کی بیماریاں بہت عام ہو چکی ہے جیسے بالوں کا گرنا بے وقت سفید ہونا یا بالوں میں خشکی پیدا ہونا یہ عام بیماریاں بن چکی ہے۔ بالوں کے امراض کے بار میں مختلف ممالک کے ڈاکٹرز نے ریسرچ کی ہے۔ اور ان کے تحقیق کے مطابق بالوں کی بیماریوں کے مختلف وجوہات ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ بالوں کو صحت ہمارے خون سے فراہم ہوتی ہے اور جب خون میں میڈی کیشن، ہارمونز یا پھر نیوٹرینٹس کی کمی کے باعث تبدیلی واقع ہوتی ہے تو بالوں کا گرنا اور خشکی جیسے مرض پیدا ہوجاتے ہیں بالکل اسی طرح انسان کا دماغی طورپریشانی کا شکار ہونا بھی بالوں کے گرنے کا باعث بنتا ہے اور اگر اس پر قابو پا لیاجائے تو بال دوبارہ بڑھنا شروع ہوجائیں گے۔ ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ جیسے ہی آپ اپنے بالوں میں کوئی غیر معمولی تبدیلی دیکھیں اور علاج کے بعد بھی بالوں کا گرنا، خشکی اور سوکھا پن دور نہ ہوتو فوری طور پر ٹرائی کولوجسٹ سے رابطہ کریں۔ تحقیق میں مزید بتایا گیا ہے کہ جو لوگ تھائی رائیڈ سے متعلق بیماریوں اور موسمی بخار کا شکار ہوجاتے ہیں ان کے بال تیزی سے گرنا شروع کردیتے ہیں اس لیے بالوں کے علاج سے پہلے ان بیماریوں کا علاج کریں تو بالوں کی بیماریاں خود بخود ختم ہوجائیں گی اس کے علاوہ کینسر، دل اور اینیمیا جیسی بیماریاں بھی بالوں کی کئی بیماریوں کا باعث بنتی ہیں۔ اس کے علاوہ جسم میں پروٹین کی کمی بھی ہمارے بالوں میں خشکی اور سفیدی کا باعث بنتی ہے۔ اور جیسے میں زنک کے کمی کے سبب بال سفید اور گر جاتے ہیں اب تمام ٹرائی کولوجسٹ کی متفقہ رائے یہ ہے کہ اگر آپ اپنے بالوں کی علاج کروانا چاہتے ہیں تو اس سے پہلے اپنے جسم میں کمی کو پورا کرنے کی کوشش کریں۔ آپ کے بال خود بخود مضبوط اور صحت مند ہو جائیں گے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *