بے نظیر بھٹو کی وصیت کو غیر مصدقہ قرار دے دیا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) آج سے جب بارہ سال پہلے محترمہ بے نظیر بھٹو اس دنیا فانی سے کوچ کر گئیں۔تو اس وقت پیپلز پارٹی کی طرف سے ایک کو وصیت منظر عام پر آگئی، یہ وصیت بے نظیر بھٹو کی تھی۔ بے نظیر بھٹو نے اپنا سیاسی جانشین آصف علی زرداری کو مقرر کیا تھا۔ اب اس پر بات کرتے ہوئے وفاقی وزیر علی زیدی نے سابق وزیراعظم شہید بے نظیر بھٹو کی وصیت کو غیر مصدقہ قرار دے دیا۔

ٹوئٹر پر جاری بیان میں علی زیدی نےکہاکہ بی بی شہیدکی غیر مصدقہ وصیت قوم کو بے وقوف بنانے کے لیے کافی تھی، بی بی شہید کی وصیت کے ذریعے پیپلزپارٹی پر قبضہ اور الیکشن جیتے گئے۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ لعل شہبازکی سر زمین کو 12 برس سے زیادہ عرصے سے تباہ کررکھا ہے، وقت آگیا ہے کہ بلاول اور زرداری وصیت دکھائیں۔ اب اس معاملے پر ترجمان سندھ حکومت مرتضیٰ وہاب کا کہنا ہے کہ وہ وصیت بی بی کے گھر میں بھی آویزاں ہے، وصیت ان کے خاندان کی میراث ہے ۔مرتضیٰ وہاب نے سوال کیا کہ علی زیدی کے خاندان میں کسی کے فوتگی ہو تو کیا وصیت مانگ سکتا ہوں؟ کون لوگ ہیں یہ جن میں اخلاقی و سماجی اقدار نہیں؟ دوسری جانب رکن پنجاب اسمبلی نشاط ڈاہا نے باغی لیگ ن لیگی ارکان کو ضیافت دی،اس دوران باغی ارکان اسمبلی نے اہم فیصلے بھی کیے۔تفصیلات کے مطابق ایم پی اے نشاط ڈاہا کی جانب سے ن لیگ کے باغی ار کان اسمبلی کے اعزاز میں ضیافت دی گئی۔ذرائع کے مطابق کھانا لاہور “کی معروف سوسائٹی میں دیا گیا جس میں نشاط ڈاہا اور مولوی غیاض الدین سمیت 20 لیگی ارکان اسمبلی نے شرکت کی۔لیگی ارکان نے متفقہ فیصلہ کیا کہ اپنی پارٹی کے ساتھ رہیں گے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *