نجی ہسپتال میں ماں کا علاج کروانے والی 17 سالہ دوشیزہ کو ڈاکٹر کے اسسٹنٹ نے بے آبرو کر دیا

سرگودہا(این این آئی)سرگودھا شہر کے نجی ہسپتال میں ماں کا علاج کروانے والی 17 سالہ دوشیزہ کو ڈاکٹر کے اسسٹنٹ نے اغواء کر کے زیورات لوٹ کر بے آبرو کر دیاـ پولیس نے واردات کا مقدمہ درج کر کے لڑکی کا طبی ملاحظ کروا لیا۔ اور ڈی این اے ٹیسٹ کے لئے سیمپل لیبارٹری بجھوا کر ملزم کے خلاف مزید کاروائی کے لئے مصروف تفتیش ہے۔

سرگودھا شہر کے علاقہ محمدی کالونی کے محنت کش محمد رفیق کی بیوی ماریہ بی بی گردوں کے مرض میں مبتلا ہو کر سٹیلائٹ ٹاون کے نجی ہسپتال میں ڈاکٹر کے زیر علاج ڈائلیسز کروا رہی ہے جس کے علاج معالجہ کے لئے اس کی 17 سالہ بیٹی سدرہ رفیق ماں کے ساتھ ڈائلیسز پر جاتی جہاں ڈاکٹر کے اسٹنٹ انیس نے مریضہ کی سترہ سالہ سدرہ رفیق کو چکنی چپڑی باتوں سے اپنے جال میں پھانسا لیا اور وقوعہ کے روز اسے موٹرسائیکل پر محلہ سے اغواء کر کے زیورات لوٹ لئے اور بے آبرو کر کے فرار ہو گیا پولیس تھانہ اربن ایریا نے محنت کش محمد رفیق کی مدعیت میں مقدمہ درج کر کے بے آبرو مغوعیہ سدرہ کا ڈی ایچ کیو ہسپتال سے طبی ملاحظہ کروا کر تفتیش شروع کر دی جس میں ڈی این اے ٹیسٹ کے لیے سیمپل لیبارٹری کو بھجوا دیا گیا جس کی رپورٹ آنے پر ملزم کے خلاف مزید کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *